Home
National
Islamabad
Punjab
Sindh
Balochistan
Khyber Pakhtunkhwa
Gilgit Baltistan
Tribal Areas
Azad Kashmir
International
Sports
Showbiz
Images
 
ہر افسر کو بلو چستان میں خدمات انجام دینی چاہئیں،چیف جسٹس
وقت اشاعت: Tuesday, 17 September, 2013, 10:01 GMT 15:01 PST

کوئٹہ (این این آئی( چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے بلوچستان بدامنی اور لاپتہ افراد کیس کی سماعت کے دوران کہا ہے کہ ٹرانسفر ہونے ہونے والے ہر افسر کو بلو چستان میں خدمات انجام دینی چاہئیں، تمام افسران حکومت پاکستان کے ملازم ہیں ۔بلوچستان کے بہت سے افسر اسلام آباد میں کام کر رہے ہیں۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ بلوچستان میں افسران لانے کے لئے بھی کیا سپریم کورٹ کو کہنا پڑے گا۔چیف جسٹس نے چیف سیکرٹیری بلوچستا ن کو حکم دیا،چیف سیکرٹری پنجاب کو ہدایت کی جائے کہ ٹرانسفر ہونے والے افسران کو فوری بھجوائیں۔حکومت سندھ کے وکیل نے عدالت کو بتایا ٹرانسفر ہونے والے پولیس افسر اسد رضا،اعتزاز احمد اور فرحت خورشید نے عدالت سے رجوع کر رکھا ہے،تینوں پولیس افسر کراچی میں ہی کام کر رہے ہیں،چیف جسٹس نے استفسار کیا سپریم کورٹ کے احکامات کے بعد ماتحت عدالت کے حکم امتناعی کی کیا اہمیت ہے۔

 
 
Click here to visit SuperWebz.com